گلشن حدید سے لڑکی کے مبینہ اغوا و زیادتی کیس کا ڈراپ سین

0
444

کراچی: گلشن حدید سے لڑکی کے مبینہ اغوا اور زیادتی کیس میں ڈراپ سین ہوگیا۔

تحقیقاتی ٹیم نے ڈیفنس کے مختلف علاقوں کی سی سی ٹی وی فوٹیج حاصل کرلی۔ سی سی ٹی وی فوٹیج میں لڑکی کو گھومتے پھرتے دکان میں خرید وفروخت کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔

مبینہ زیادتی کا شکار لڑکی کا تفیشی افسر نے 164 بیان عدالت میں جمع کروا دیا ہے۔

لڑکی نے اپنے بیان میں بتایا کہ مجھے سمیع، فواد، عمیر نے بلیک میل کیا اور تصویر وائرل کرنے کی دھمکیاں دی۔ 9 فروری کو عمیر بھٹو مجھے بائیک پر دھوکے سے گھر لے گیا۔ شادی کروں گا اور میرے ساتھ زبردستی کرنا شروع کردی۔ صبع ہوتے ہی عمیر بھٹو نے شادی سے انکار کردیا اور کہا کہ میں پولیس افسر کا بیٹا ہوں اور میرا نام لیا تو تمہارے پورے خاندان کو تباہ کردوں گا۔

پولیس حکام کے مطابق لڑکی کے بیان کی روشنی میں تفیش جاری ہے۔ فواد، سیمع، عادل، سمیر گرفتار ہیں جبکہ عمیر بھٹو ضمانت پر ہے۔ تفیش میں لڑکی کے ساتھ گینگ ریپ اور اغوا کے شواہد نہیں ملے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں